Jb Hazrat Umer Ne liya 2 sahaba ka Imtihan

Rate this post

*حضرت عمر رضی اللہ عنہ نے ایک دفعہ ایک تھیلی  میں  چار سو دینار ڈالے اور دو صحابہ کی طرف کیوں بھیجے؟

حضرت عمر رضی اللہ عنہ نے ایک دفعہ ایک تھیلی میں چار سو دینار ڈالے*💞💞

 اور اپنے غلام سے کہا یہ تھیلی حضرت ابوعبیدہ بن جراح رضی اللہ عنہ کے پاس لے جاؤ ۔ انہیں بتاؤ کہ امیرالمومینین نے یہ تھیلی آپ کے لیے ہدیہ بھیجی ہے اور پھر کچھ دیر وہیں رک کر دیکھنا کہ وہ اس تھیلی کا کیا کرتے ہیں ۔

غلام وہ تھیلی لے کر حضرت ابو عبیدہ بن جراح رضی اللہ عنہ کے پاس پہنچا اور عرض کیا کہ امیرالمومینین فرما رہے ہیں کہ یہ رقم آپ اپنی ضروریات میں خرچ کر لیں ۔

حضرت ابو عبیدہ رضی اللہ عنہ نے وہ تھیلی لیتے ہوئے کہا ۔ اللہ انہیں بہترین بدلہ عطا فرمائے اور ان پر رحمتیں نازل کرے ۔ اس کے بعد اپنی ایک باندی کو بلایا اور کہا کہ یہ لو سات دینار فلاں کو دے آؤ ، پانچ فلاں کو دے آؤ ، پانچ فلاں کو ۔ یہاں تک کہ سارے کے سارے دینار اسی وقت مختلف لوگوں میں تقسیم کر دیے اور اپنی ضرورت کے لیے ایک دینار بھی نہ رکھا ۔

غلام نے آکر سارا ماجرا حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے گوش گزار کر دیا۔ حضرت عمر رضی اللہ عنہ نے چار سو دینار کی ایک اور تھیلی تیار کی اور غلام سے کہا کہ یہ تھیلی حضرت معاذ بن جبل رضی اللہ عنہ کے پاس لے جاؤ اور انہیں بھی کہنا کہ یہ تھیلی امیرالمومینین نے آپکی ضروریات کے لیے بھیجی ہے اور وہاں بھی تھوڑی دیر رک کر دیکھنا کہ وہ کیا کرتے ہیں ۔

غلام وہ تھیلی لے کر حضرت معاذ بن جبل رضی اللہ عنہ کے پاس پہنچا اور عرض کیا کہ امیر المومینین نے یہ رقم آپ کے لیے بھیجی ہے تا کہ آپ اسے اپنی ضروریات پوری کرنے میں صرف کر لیں ۔

حضرت معاذ بن جبل رضی اللہ عنہ نے فرمایا کہ اللہ ان کو بہتر صلہ دے اور ان پر رحمت کرے اور پھر اسی وقت اپنی باندی کو بلایا اور کہاں کہ فلاں کے گھر اتنی رقم پہنچا دو، فلاں کے گھر اتنی۔ اتنے میں حضرت معاذ رضی اللہ عنہ کی بیوی نے پردے سے پیچھے سے جھانک کر کہا خدا کی قسم ہم بھی بہت ضرورت مند ہیں ہمیں بھی کچھ دیجیئے ۔

حضرت معاذ بن جبل رضی اللہ عنہ نے تھیلی کو ٹٹولا تو اس میں دو دینار بچے تھے، یہ دو دینار انہوں نے اپنی بیوی کی طرف پھینک دیے ۔

غلام حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے پاس لوٹ آیا اور سارا قصہ سنایا تو حضرت عمر رضی اللہ عنہ بہت مسرور ہوئے اور فرمانے لگے خدا کی قسم یہ سب لوگ بھائی بھائی ہیں اور ایک جیسے ہیں ۔

(الترغیب و الترہیب ج 2 ص 41،42 )

*نوٹ* اس پیغام کو دوسروں تک پہنچائیے تاکہ اللہ کسی کی زندگی کو آپ کے ذریعے بدل دے

محمد عدنان چنڈہ بندیالوی

I am Muhammad Adnan Khan Chunda. I am student(Talib e Ilm) Of Jamia Muhammadiya Hanfiya Sulamani Near Jatta Adda Naivela. I love To Teach You Islamic Information like Masail,Hadees and Quotes of Bazurgane din.

Leave a comment