ماہ رجب کے فضائل

Rate this post

ماہ رجب سورت توبہ 36: “جس دن اللہ نے آسمانوں اور زمین کو پیداکیا، اسی دن سے اللہ کے نزدیک اسی کی کتاب میں مہینوں کی تعداد بارہ ہے

ان میں سے چار حرمت والے مہینے ہیں۔” اس آیت کی تشریح حدیث کے بغیر نہیں ہو گی اور یہ بات منکرین احادیث کے لئے عذاب ہے۔

ماہ رجب المرجب

صحیح بخاری 4406: “سال کے بارہ مہینے ہوتے ہیں۔ چار ان میں سے حرمت والے مہینے ہیں۔ تین لگاتار ہیں، ذی قعدہ، ذی الحجہ اور محرم (اور چوتھا) رجب مضر جو جمادی الاولیٰ اور شعبان کے بیچ میں پڑتا ہے۔”

سورہ بقرہ 194: ’’حرمت والا مہینہ حرمت والے مہینے کے بدلے میں اور حرمتیں ایک دوسرے کابدلہ ہوتی ہیں۔ پس جوتم پرزیادتی کرے، تم اس پر زیادتی کرو اتنا ہی جتناتم پر زیادتی کی، اوراللہ سے ڈرو اور جان لو کہ اللہ متقیوں کے ساتھ ہے۔‘‘

تشریح: مہینوں میں حرمت کا حکم دو طرح سے ہے، ایک تو اس میں لڑائی کرنا منع اور دوسرا ان متبرک مہینوں میں عبادت کرکے رب کو راضی کریں۔

پہلا حکم تو شریعت اسلام میں منسوخ ہو گیا یعنی لڑائی کرنا جائز ہے مگراس مہینے میں عبادت کا عمل اب بھی جاری ہے۔

رجب میں غزوات

اسلئے رجب 2 ھ کو سریہ عبداللہ بن حجش اسدی ہوا۔ (طبقات ابن سعد: 10،2) 6 ھ کو سریہ سیدنا زید بن حارثہ (وادی القریٰ کی جانب ) ہوا (طبقات ابن سعد:89،2)

رجب 8 ھ سریہ الخبط زیرقیادت سیدنا ابوعبیدہ ابن الجراح ہوا۔ (طبقات ابن سعد :132،2) 9 ھ کو غزوہ تبوک ہوا۔ (طبقات ابن سعد:165،2)

رجب کی فضیلت حدیث مبارکہ سے

جامع صغیر حدیث 3094 : رجب اللہ کا مہینہ، شعبان میرا اور رمضان میری امت کا مہینہ ہے۔

امام بیہقی نے شعب الایمان میں سیدہ عائشہ سے روایت کی ہے “بے شک رجب اللہ کا مہینہ ہے، اسے اصم بھی کہتے ہیں۔

زمانہ جاہلیت میں جب آتا تو لوگ اپنے اسلحہ سے کام لینا چھوڑ دیتے اور انہیں اٹھا رکھتے تھے۔

پھر مسافر لوگ امن سے رہتے اور راستہ پر امن ہو جاتا۔ یہاں تک کہ یہ مہینہ گذر جاتا۔

*تمامی أحباب کو ماہ شعبان المعظم کی آمد بہت بہت مبارک ہو.*

ذوالنون مصری رحمہ اللہ فرمایا کرتے تھے: رجب برائیوں کو ترک کرنے، شعبان نیکیاں کرنے اور رمضان میں عزت افزائی کے معجزے رونما ہونے کا مہینہ ہے، لہذا اگر کوئی شخص برائیاں ترک نہیں کرتا، نہ ہی نیکیاں کرتا ہے اور نہ ہی رمضان میں عزت افزائی کا منتظر ہوتا ہے تو وہ غافل ہے۔

آپ نے فرمایا کہ: ماہ رجب پنیری لگانے کا، شعبان پانی لگانے کا اور رمضان کٹائی کا مہینہ ہے۔ ہر شخص وہی کاٹتا ہے جو بوتا ہے، اسے وہی بدلہ دیا جاتا ہے جو اس نے کیا ہوتا ہے

چنانچہ اگر کسی نے بوائی میں کمی کی تو وہ کٹائی کے دن ندامت اٹھاتا ہے، اور وہ اپنے برے نتائج کی وجہ سے اپنے خیالات کے برعکس چیزیں پاتا ہے۔

ماہ رجب کی فضیلت

 *بزم چشتیہ فاضلیہ گڑھی شریف*

 رجب میں عبادت

اہلحدیث حضرات کے نزدیک تو رجب میں عبادت کی جتنی احادیث آتی ہیں وہ سب ضعیف ہیں، اسلئے وہ ان پر عمل کرتے نہیں حالانکہ نفلی عبادت یعنی درود، قرآن پڑھنا کسی وقت منع نہیں۔

نفل نماز مکروہ اوقات کے سوا کسی وقت منع نہیں۔ نفلی روزہ عیدین اور ایام تشریق کے پانچ دن چھوڑ کر کسی بھی دن منع نہیں۔

اصول: دیوبندی و بریلوی تعلیم ایک ہی ہے، اسلئے اگر کوئی رجب کے مہینے میں عبادت نہیں کرتا تو کوئی گناہ نہیں مگر اس کو لازم نہ سمجھے

البتہ اہلحدیث حضرات یہ اصول کبھی نہیں بتاتے کہ کس مجتہد نے کہا تھا کہ اب ہم صرف صحیح احادیث پر عمل کریں گے اور ضعیف احادیث کے منکر ہو جائیں گے۔

دین دُشمنی: اہلحدیث یہ اصول نہیں بتا سکتے کیونکہ اگر بتاتے ہیں تو اُس مجتہد کے مقلد ہو جائیں گے جیسے اہلسنت حنفی، شافعی، مالکی، حنبلی ہیں اور اگر نہیں بتاتے تو پھر رافضیوں کی طرح تقیہ بازی کرتے ہیں۔ (جاری ہے۔۔۔۔)

مشن: ہمارا جذبہ و جنون اپنے پانچ فٹ پر اسلام قائم کرنا۔ اپنے گھر سے تبلیغ شروع کر کے اپنے علاقے سے ہوتے ہوئے پورے پاکستان میں صرف بات بتانی اور پھیلانی ہے تاکہ ہر عقلمند تحقیق کر کے ہمیں بھی سمجھا دے یا پھر دوسروں کو سمجھانا شروع کر دے۔

ماہ رجب المرجب اور شعبان المعظم میں اولیاء کرام کے تواریخ وصال

ماہ رجب المرجب اور شعبان المعظم میں اولیاء کرام کے تواریخ وصال

ماہ رجب کی دعا

‏جب ماہِ رجب شروع ہوتا تو رسول اللہ ‌صلی ‌اللہ ‌علیہ ‌وآلہ ‌وسلم یہ دعا فرماتے

اللهم بارك لنا في رجب وشعبان وبلغنا رمضان

اَللّٰہُمَّ بَارِکْ لَنَا فِی رَجَبٍ وَشَعْبَانَ وَبَارِکْ لَنَا فِی رَمَضَانَ۔

اے اللہ! ہمارے لئے رجب اور شعبان میں برکت فرما اور ہمارے لیے رمضان کو مبارک بنا۔

 (مسند احمد: ۳۶۶۹)

مزید پڑھیں

ماہ صفر المظفر میں سلسلہ عالیہ چشتیہ کے بزرگان کے یوم…

🌻🌻 یاد دہانی 🌻🌻

وَّ ذَکِّرۡ فَاِنَّ الذِّکۡرٰی تَنۡفَعُ الۡمُؤۡمِنِیۡنَ ﴿۵۵﴾

اور آپ نصیحت کرتے رہیں کہ بیشک نصیحت مومنوں کو فائدہ دیتی ہے. (الذاریات55)

روایات میں ہے کہ

رجب المرجب اللہ کا مہینہ ہے

شعبان المعظم آقا کریم ﷺ کا مہینہ ہے اور

رمضان المبارک امت کا مہینہ قرار دیا گیا ہے ❤️❤️

آقا کریم ﷺ ، رمضان المبارک سے قبل، رجب اور شعبان میں کثرت سے روزے رکھا کرتے تھے!!

ماہِ رجب کا چونکہ آغاز ہوا چاہتا ہے، آئیے آقا کریم ﷺ کی اتباع میں، رجب اور شعبان میں روزے رکھنے کی نئیت کریں اور پھر اس کے لئے خوب کوشش بھی کریں …!!

اللہ پاک ہماری توفیقات میں برکتیں عطا فرمائے 😊😊🤲🤲

I am Muhammad Adnan Khan Chunda. I am student(Talib e Ilm) Of Jamia Muhammadiya Hanfiya Sulamani Near Jatta Adda Naivela. I love To Teach You Islamic Information like Masail,Hadees and Quotes of Bazurgane din.

Leave a comment