Titan Ki Ameer Aur Aik Ghareeb Keshti

Rate this post

ہائے…یہ انسانوں کے بنائے ہوئے ضابطے اور قانون ….امیراور غریب میں فرق ظاہرکریتے ہیں….ڈالراور روپیہ بہت بری چیز ہے صاحب…!

ایک طرف سینکڑوں نوجوان آنکھوں میں مستقبل کے سہانے خواب سجائے…… موجوں سے لڑتے ہوئے سمندر کی تہہ میں چلے گئے اور اطراف میں تماشائی موت کاتماشہ دیکھتے رہے…ویڈیوبناتے رہے…

دوسری طرف چند ”بڑے“ لوگ لاکھوں ڈالرخرچ کرکے سمندرمیں اترتے ہیں….اچانک رابطہ منقطع ہوجاتاہے….ہلچل سی مچ جاتی ہے….سینکڑوں کے مقابلے میں دہائی فوقیت حاصل کرچکاہوتاہے….وہی موت کے سوداگراب خود فرشتہ حیات بن کراپنی وفاداری کااظہار کررہے ہوتے ہیں…ایک دوملک نہیں ..امریکہ،کینڈا اور برطانیہ سمیت دنیاکے بہترین آرمی اور ٹیکنیکل ٹیمز میدان عمل میں فوری پہنچ جاتے ہیں…پوچھاگیا…..کیامرگئے ہیں سارے؟….کہاگیا….نہیں نہیں …ابھی تک اس آبدوز میں آکسیجن باقی ہے….لیکن خوف ہے کہیں موت کی خبرنہ آجائے…اک Titanic کے ساتھ اک اور Titen معمہ نہ بن جائے….

بہت بری ہے یہ دنیا…..غرض اور مفاد کی ہے یہ دنیا….جہاں بچاسکتے تھے….انھیں موت کے منہ میں دھکیل دیاگیا…جہاں بچاناممکن نہیں ….انھیں اب بھی امید ہے….فرق کیاہے صاحب! فقط امیری اور غریبی ہے….ایک بھوکاپیٹ سوار ہواتھا….اور ایک کاپیٹ بھرچکاتھا اور مزید کسی نئی دنیاکامتلاشی تھا….

لیکن…..بھول بیٹھاہے حضرتِ انسان….کوئی ہے جواسے دیکھتاہے….وہ علیم ہے وہ خبیرہے ،وہی مالک الملک وہی قدیرہے ….بصورت آیات قرآنی ہمیں سمجھارہاہے” قُلْ مَتَاعُ الـدُّنْيَا قَلِيْلٌ ؕ وَالْاٰخِرَةُ خَيْـرٌ لِّمَنِ اتَّقٰىۚ وَلَا تُظْلَمُوْنَ فَتِيْلًا …

تحریربقلم✏: #TayyabRaheemi

جب مجھے پتہ چلا کہ محل کے بستر اور خالی زمین پرسونے والوں کے خواب اور قبریں ایک جیسی ھُوا کرتی ھیں تو مجھے اَللہ کے اِنصاف پر یقین آ گیا۔

“شیخ سَعدی رَحمتہُ اللہ علیہ”

I am Muhammad Adnan Khan Chunda. I am student(Talib e Ilm) Of Jamia Muhammadiya Hanfiya Sulamani Near Jatta Adda Naivela. I love To Teach You Islamic Information like Masail,Hadees and Quotes of Bazurgane din.

Leave a comment