استقبال ماہ ربیع الاول 2023

Rate this post

ربیع الاول وہ ماہِ مبارک ہے جس میں نبی محتشم حضرت محمد مصطفیٰﷺ کی ولادت ہوئی۔

ربیع الاول سرُورِ ہستی نثار تیری چہل پہل پر

ہے لمحے لمحے میں تیرے مستی نثار تیری چہل پہل پر

کریم ایسا ہے تجھ میں آیا کہ جس کی رحمت پسندیوں سے

متاعِ بخشش ہوئی ہے سَستی نثار تیری چہل پہل پر

ترے ورودِ کرم سے روشن ہوئے در و بام میرے گھر کے

گلی محلہ تمام بستی نثار تیری چہل پہل پر

مرے تخیل کی تابناکی تری خنک ساعتوں پہ قرباں

مرے قلم کی فراخ دستی نثار تیری چہل پہل پر

جو بت پرستی کا دائرہ تھا وہاں دوشنبہ کی صبح تو نے

کیا ہے اعلانِ حق پرستی نثار تیری چہل پہل پر

جمالِ فن کی تجلیاں تیری خاص نسبت سے کر رہی ہیں

کلامِ فاضل کی سرپرستی نثار تیری چہل پہل پر

فاضل میسوری

 ماہ ربیع الاول مبارک ماہ ربیع الاول ماہ ربیع الاول کی اہمیت استقبال ماہ ربیع الاول ماہ ربیع الاول کا چاند مبارک ماہ ربیع الاول کا پیغام

نعتِ رسولِ مقبول

لب پہ صل علیٰ گنگناؤ آمدِ مصطفٰے آ رہا ہے

جشنِ میلاد سرور مناؤ آمدِ مصطفٰے آ رہا ہے

مرحبا مصطفٰے کی صدا ہے ہر طرف نورِ صل علیٰ ہے

 عاصیوں تم ذرا مسکراؤ آمدِ مصطفٰے آ رہا ہے

نورسے یہ مزین ہے سینہ اس میں رہتے ہیں شاہِ مدینہ

اُن کی آمد کے نغمے سناؤ آمدِ مصطفٰے آ رہا ہے

چار سو رحمتِ کبریا ہے یک زباں لب پہ جاری صدا ہے

دل میں آقا کی الفت بساؤ آمدِ مصطفٰے آ رہا ہے

عاشقِ مصطفٰے کی دعا ہے اور خورشید کی التجاء ہے

اپنا سویا مقدر جگاؤ آمدِ مصطفٰے آ رہا ہے

سیّد خورشید سہسرامی انڈیا ✍️

اے ہلال عید میلاد النبی صد مرحبا

دیکھ کر تجھ کو ملی ہے زندگی صد مرحبا

مرحبا یا مصطفی مرحبا یا مصطفی

ہو مبارک آگئے آقا میرے خوش آمدید

کہہ رہی ہے کعبے کی پاکیزگی صد مرحبا

مرحبا یا مصطفی مرحبا یا مصطفی

ہر گلی میں ہے چراغاں نور ہے چھایا ہوا

ان کے آنے سے مٹی ہے تیرگی صد مرحبا

مرحبا یا مصطفی مرحبا یا مصطفی

ماہ ربیع الاول مبارک ماہ ربیع الاول ماہ ربیع الاول کی اہمیت استقبال ماہ ربیع الاول ماہ ربیع الاول کا چاند مبارک ماہ ربیع الاول کا پیغام

نعتِ آمدِ رسول ﷺ

مچی ہے دھوم نبی میرا آنے والا ہے

چراغِ حق وہ جہاں میں جلانے والا ہے

جہان والوں سے کہہ دو ستم کو بند کریں

سراپا رحمت عالم وہ آنے والا ہے

وہ جس کے نور سے دنیا میں روشنی پھیلے

سحر کے وقت وہی جگمگانے والا ہے

وہ جس کےہوتےہیں دونوں جہان میں چرچے

نصیب سب کا وہ آکر جگانے والا ہے

بتوں کے آگےجو سر کو جھکائے بیٹھے تھے

خدا کے سامنے ان کو جھکانے والا ہے

نظامِ عدل کو نافذ کرے گا دنیا میں

ستم کو جڑ سے نبی وہ مٹانے والا ہے

بلا کی قید میں جو ہے پھنسا زمانے سے

اسے وہ اپنے کرم سے چھڑانے والا ہے

ستم کےماروں پہ رکھیں گےدستِ شفقت وہ

گلِ مرادِ یتامٰی کھلانے والا ہے

وہ اپنے شانِ کریمی سے رونے والوں کو

سنا کے مژدہ خوشی کا ہنسانے والا ہے

جو مفلسی کے دہانے پہ کھڑے ہیں ان کو

نجات کشتیِ غم سے دلانے والا ہے

ابوالبشر کی جو پیشانیِ مبارک میں

چمک رہا تھا زمانے سے آنے والا ہے

بتوں سے خانہءِ کعبہ سے پاک وصاف کرے

خدا کا ذکر وہاں پر کرانے والا ہے

وہ شہرِ مکہ سے اک روز کرے گا ہجرت

مدینہ پاک کی رونق بڑھانے والا ہے

بچا کے عصیاں شعاروں کو نارِ دوزخ سے

بہارِ خلدِ بریں میں وہ لانے والا ہے

خدا نے دی ہے خزانوں کی کنجیاں اس کو

سخاوتوں کا وہ دریا بہانے والا ہے

وہ دے گا عدل و مساوات کا سبق ہم کو

پیام سب کو امن کا سنانے والا ہے

بھٹک رہے ہیں جو گمراہیوں کے دلدل میں

انھیں نجات کا رستہ بتانے والا ہے

جہاں سے بغض و عداوت کا خاتمہ ہوگا

نظام ایسا وہ بہتر چلانے والا ہے

ستم کی ماری پریشان بنتِ حوا کی

جہان بھر میں وہ عزت بڑھانے والا ہے

قمر کا چاک کرے گا وہ ایک شب سینہ

حجر سے کلمہ بھی اک دن پڑھانے والا ہے

علی کے واسطے اک دن مقامِ صہبا میں

وہ ڈوبے خور کو بھی واپس بلانے والا ہے

اکھڑ کے آئیں گے دربار میں شجر اس کے

یہ معجزہ بھی جہاں کو دکھانے والا ہے

گواہی دیں گے نبوت کی جانور اس کے

وہ انگلیوں سے بھی چشمہ بہانے والا ہے

لعابِ پاک کی برکت کا اس کے کیا کہنا

جو کھاری کنویں کو میٹھا بنانے والا ہے

غضب کی اس کی نہیں پڑتی ہے نگاہ کبھی

وہ دشمنوں پہ بہت رحم کھانے والا ہے

فلک پہ رہتی جو مخلوق ہیں خبر کردو

“کوئی زمین پہ نعتیں سنانے والا ہے”

نہ کر سکے گا بیاں “نور” خوبیاں اس کی

خدا ہی جانے اسے کیا بنانے والا ہے

نورالہدیٰ نور مصباحی

حضور آپ کی آمد سے چین سب کو ملا

حضـــــــــــــور آپ کا آنا زمـانِ رحمت ہے

عابدرضاقاؔدری

ٹھنڈی ٹھنڈی ہوا رحمتوں کی چلی

بن کے موجِ کرم مصطفی آگئے

مولود کی گھڑی ہے چلو آمنہ کے گھر پر

اے خلد کی بہاروں سرکار آرہے ہیں

اور کوئی غیب کیا تم سے نہاں ہو بھلا،

جب نہ خدا ہی چھپا، تم پہ کروڑوں درود!!!

وَأَمَّا بِنِعْمَةِ رَبِّكَ فَحَدِّثْ

اور اپنے رب کی نعمتوں کا (خوب) تذکرہ کریں

(الضُّحٰی، 93 : 11)

محسنِ انسانیت، غمگسارِ عالم، رحمتِ کُل جہاں حضرت محمد مصطفیٰﷺ کی ولادتِ باسعادت کے ماہ کا استقبال، ماہِ ربیع الاول کی آمد مرحبا۔

تمام عالم اسلام کو ربیع الاول کا چاند مبارک ہو

 شان وکھرا دن مہینے سال دا

کیوں کہ چن چڑھیا آمنہ دے لال حضورﷺدا

جــــــــــــشن عـــــــید میلاد النبی ﷺ کی آمــــــد

مـــــــــــــــــــــــــــبارک ہـــــو

‏آپ ﷺ جب چاند دیکھتے تو فرماتے۔

اللَّهُمَّ أَهْلِلْهُ عَلَيْنَا بِالْيُمْنِ وَالْإِيمَانِ وَالسَّلَامَةِ وَالْإِسْلَامِ رَبِّي وَرَبُّكَ اللَّهُ

اے اللہ ! مبارک کر ہمیں یہ چاند ، برکت اور ایمان اور سلامتی اور اسلام کے ساتھ (اے چاند ! )میرا اور تمہارا رب اللہ ہے۔

 (ترمذی،۳۴۵۱)

بہار آئی دفعتا سجی زمین کی انجمن

پون چلی سنن سنن کلی کلی چمن چمن

صبا پکارتی چلی کہ چن چڑھیا آمنہ دے لال دا

رب آکھیا سوہنیا محبوبا ﷺ دس کیہو جیا تینون بناؤنا ایں

محبوبﷺ آکھیا ایہو جیا بنا مولا میری جان دو جہاناں دی جان ہوے

کدی میں بولاں کدی توں بولیں جدوں توں بولیں اودوں میں بولاں

جدوں میں بولاں اودوں توں بولیں ساڈی دوواں دی اکو زبان ہوے

 ماہ ربیع الاول مبارک ماہ ربیع الاول ماہ ربیع الاول کی اہمیت استقبال ماہ ربیع الاول ماہ ربیع الاول کا چاند مبارک ماہ ربیع الاول کا پیغام

استقبال ماہ میلاد

آمد ماہ ربیع الاول شریف ہے

اللہ پاک حضورﷺ کی میلاد کا صدقہ سب کو عشق مصطفیﷺ میں زندگی بسر کرنے کی توفیق عطاء فرمائے۔

🌷💐⚘💗💐⚘💗🌸⚘💗💐⚘💗💐⚘💗🌷

جــــــــــــشن عـــــــید میلاد النبی ﷺ کی آمــــــد مرحبا

🥀اَلصَّلَاةُ وَالسَّلَامُ عَلَيْكَ يَا خَاتَمَ النَّبِيينَﷺ.🌹⚘🌹

اَللهُمَّ صَلِّ عَلَى سَيِّدِنَا مُحَمَّدٍﷺ وَعَلَى آلِ سَيِّدِنَا مُحَمَّدٍﷺ

وَ بَارِك وََسَلَّمْ🌷🍥🍥❤🍥🍥🌷

آمین ثم آمین یا رب العالمین

I am Muhammad Adnan Khan Chunda. I am student(Talib e Ilm) Of Jamia Muhammadiya Hanfiya Sulamani Near Jatta Adda Naivela. I love To Teach You Islamic Information like Masail,Hadees and Quotes of Bazurgane din.

Leave a comment